ATBAF ABRAK

( افتاب اکبر )

Akhri bar tum pe aya tha

Akhri bar tum pe aya tha-best urdu poetry

میں یہ سمجھا نیا مکیں آیا
گھوم کر دل یہ پھر وہیں آیا

آخری بار تم پہ آیا تھا
پھر مرے ہاتھ دل نہیں آیا

تب تلک دور جا چکا تھا میں
جب تلک تم کو تھا یقیں آیا

اک تجسس نے عمر بھر ڈھونڈا
نہ نظر تم سا پر حسیں آیا

آنکھ کھلتے ہی رو دیا ناداں
اس قدر خواب دل نشیں آیا

زندگی ہے عجب سفر ابرک
جا رہا تھا کہیں، کہیں آیا

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔. اتباف ابرک